سندھ اسمبلی : نصرت سحر عباسی اور منظور وسان کے درمیان تلخ جملوں کا تبادلہ

انہیں صرف پوائنٹ اسکورنگ کرنی آتی ہے، یہ ایم کیو ایم لندن بننا چاہتی ہیں،منظور حسین وسان ایک دن میڈیا بند ہو تو نصرت سحر عباسی خاموش ہوجائیں گی، یہ میڈیا پر دکھانے کے لیے شور مچاتی ہیں،شہلا رضا

بدھ اپریل 20:40

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 اپریل2018ء) ڈپٹی اسپیکر سندھ اسمبلی شہلا رضا نے کہا ہے کہ ایک دن میڈیا بند ہو تو نصرت سحر عباسی خاموش ہوجائیں گی، یہ میڈیا پر دکھانے کے لیے شور مچاتی ہیں۔۔سندھ اسمبلی میں اجلاس کے دوران فنکشنل لیگ کی رہنما نصرت سحر عباسی اور منظور وسان کے درمیان تلخ جملوں کا تبادلہ ہوا ہے۔بدھ کو سندھ اسمبلی کا اجلاس ڈپٹی اسپیکر شہلا رضا کی صدارت میں ہوا جس میں مسلم لیگ فنکشنل کی رکن اسمبلی نصرت سحر عباسی نے کہا کہ وکلا کا اغوا کیا جانا باعث تشویش ہے،لاڑکانہ میں دوران حراست نوجوان ماردیاگیا۔

نصرت سحر کے نکتہ اعتراض پر صوبائی وزیر منظور وسان نے جواب دیا کہ انہیں صرف پوائنٹ اسکورنگ کرنی آتی ہے، یہ ایم کیو ایم لندن بننا چاہتی ہیں۔

(جاری ہے)

انہوں نے مزید کہا کہ وکلا ہمارے اپنے ہیں،یہ لوگ دھاندلی سے الیکشن جیتتے ہیں،2کروڑ بھتہ لینے اور زمینوں پر قبضہ کرنے والوں کاہمیں معلوم ہے۔رکن سندھ اسمبلی مسلم لیگ فنکشنل نصرت سحرعباسی نے اس موقع پر شدید احتجاج کیا۔

اس موقع پر شہلا رضا نے کہا کہ ایک دن میڈیا بند ہو تو نصرت سحر عباسی خاموش ہوجائیں گی،یہ میڈیا پر دکھانے کے لیے شور مچاتی ہیں۔۔منظور وسان نے ڈپٹی اسپیکر سے نصرت سحر کو بٹھانے کا مطالبہ کیا ۔جس پر شہلا رضا نے کہا کہ منظور وسان اپنی بات جاری رکھیں نصرت سحر کی بات ریکارڈ نہیں ہو رہی۔۔سندھ اسمبلی کا اجلاس جمعرات کی صبح 10بجے تک ملتوی کردیا گیا۔