سخت سیکیورٹی میں 8 محرم الحرام کے جلوس‘موبائل فون سروس معطل

مرکزی راستوں کے اطراف پر بذریعہ کنٹینرز 200 گلیاں بند ‘عمارتوں پر ماہر نشانہ باز تعینا ت رہے

بدھ ستمبر 17:52

سخت سیکیورٹی میں 8 محرم الحرام کے جلوس‘موبائل فون سروس معطل
کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 ستمبر2018ء) کراچی سمیت ملک بھر میں 8 محرم الحرام کے جلوس برآمد ہوئے ،جن کی سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے تھے جبکہ متعدد شہروں میں موبائل فورن سروس بھی معطل رہی ۔تفصیلات کے مطابق بدھ کے روز 8محرم الحرام کے موقع پر کراچی سمیت ملک بھر میں بڑے جلوس برآمد ہوئے‘ان جلوسوں کی سیکیورٹی کیلئے سخت انتظامات کئے گئے تھے اور متعدد شہروں میں موبائل فون اور انٹرنیٹ سروس مکمل طور پر معطل رہی ،کراچی میں نشتر پارک سے برآمد ہونے والے مرکزی جلوس کے راستے کے اطراف کنٹینرز رکھ کر 200 سے زائد گلیوں کو بند کیا گیا ، جلوس کی نگرانی کے لیے سی سی ٹی وی کیمرے بھی فعال رہے جبکہ جلوس کی گزرگاہ پر واقع بلند عمارتوں پر پولیس کے ماہر نشانہ باز تعینا ت رہے ۔

کراچی میں پولیس کے 5 ہزار اہلکاروں نے سیکیورٹی کے فرائض انجام دیئے جبکہ رینجرز کی بھاری نفری بھی جلوس اور مجالس کی حفاظت پر مامور رہی ۔

(جاری ہے)

شہری انتظامیہ نے ایم اے جناح پر گڑھے بھر کر استر کاری بھی کی ۔شہر قائد میں 8 سے 10 محرم تک موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد ہے، جبکہ حفاظتی اقدامات کے تحت جلوسوں کی گزر گاہوں پر موبائل فون سروس بھی بند ہے۔

کراچی سمیت سندھ کے مختلف شہروں میں 9 اور 10 محرم کو بھی موبائل فون سروس جزوی طور پر معطل رہے گی۔اسلام آباد میں 8 محرم الحرام کے 3 بڑے جلوسوں کے لیے پولیس نے ٹریفک اور ڈائیورڑن پلان جاری کر دیا ہے۔شہدائے کربلا کی یاد میں لاہور، راولپنڈی، ملتان، بہاولپور، سیالکوٹ، حیدرآباد، پشاور اور کوئٹہ سمیت دیگر شہروں میں شبیہ علم اور ذوالجناح کے جلوس نکالے جائیں گے۔جلوسوں کی سیکیورٹی کے لیے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے ہیں، جلوسوں کی گزر گاہوں کو کنٹینرز اور دیگر رکاوٹیں لگا کر بند کیا گیا ہے جبکہ ٹریفک کو متبادل راستوں پر موڑا گیا ہے