حکومت کے خلاف لانگ مارچ کا آپشن زیر غورہے.امیر جماعت اسلامی

ان ہاﺅس تبدیلی کے لیے آئینی طریقہ کار موجودہے تاہم کسی غیر آئینی اقدام کا ساتھ نہیں دیں گے.سراج الحق کی منصورہ میں صحافیوں سے گفتگو

Mian Nadeem میاں محمد ندیم جمعرات دسمبر 20:02

حکومت کے خلاف لانگ مارچ کا آپشن زیر غورہے.امیر جماعت اسلامی
لاہور(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین-ا نٹرنیشنل پریس ایجنسی۔03 دسمبر ۔2020ء) امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ حکومت کے خلاف لانگ مارچ کا آپشن زیر غور، لیکن ابھی اس کے شیڈول کا اعلان قبل از وقت ہے سونامی کو ناکامی کے بعد اب بدنامی کا سامنا ہے ان ہاﺅس تبدیلی کے لیے آئینی طریقہ کار موجودہے، کسی غیر آئینی اقدام کا ساتھ نہیں دیں گے.

پی ڈی ایم والوں نے چار چار دفعہ باریاں لیں پی ٹی آئی نے اڑھائی سال میں نااہلی کے سبھی ریکارڈ توڑدیے ہیں حکمران طبقہ نے 70 سالوں میں عوام سے بے وفائی کی ان سب کو گھر بھیجنا ہماری جدو جہد کا مقصد ہے حکومت معذور افراد کے لیے بہترین تعلیمی و طبی سہولتوں کا مفت بندو بست کرے. ان خیالات کا اظہار انہوں نے معذور افراد کے عالمی دن کے موقع پر منصورہ میں منعقدہ خصوصی تقریب سے خطاب اور بعد میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا تقریب کا اہتمام الخدمت فاﺅنڈیشن پاکستان کی جانب سے کیا گیا تھا۔

(جاری ہے)

اس موقع پر سینیٹر سراج الحق، سیکرٹری جنرل جماعت اسلامی امیر العظیم،صدر الخدمت فاﺅنڈیشن عبدالشکور نے خصوصی صلاحیتوں کے حامل افراد میں تحائف بھی تقسیم کیے.

سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ پی ٹی آئی کی وفاقی و صوبائی حکومتیں انتہائی کمزور وکٹ پر کھڑی ہیں اگر اپوزیشن جماعتیں ان ہاو¿س تبدیلی لانا چاہتی ہیں تو اس کے لیے آئین میں طریقہ کار موجود ہے، تاہم انہوں نے واضح کیا کہ جماعت اسلامی پکڑ دھکڑ و خرید و فروخت کے حربوں اور دیگر کسی غیر آئینی اقدام کی حمایت نہیں کرے گی. انہوں نے کہاکہ پی ٹی آئی کے سونامی کو گزشتہ اڑھائی سالوں میں ہی ناکامی کے بعد بدنامی کا سامنا کرنا پڑ گیاہے متحدہ اپوزیشن کی تحریک میں بھی وہ جماعتیں شامل ہیں جو چار چار دفعہ حکومتیں کر چکی ہیں جب ہم سے کہا جاتاہے کہ جماعت اسلامی پی ڈی ایم کا ساتھ کیوں نہیں دیتی تو ہمارا جواب یہی ہوتاہے کہ پی ڈی ایم جماعت اسلامی کی عوامی جدوجہد میں شامل کیوں نہیں ہو جاتی.

انہوں نے کہاکہ حقیقت یہ ہے کہ حکمران طبقے نے 70 سالوں میں عوام اور نظریہ پاکستان کے ساتھ بے وفائی کی اب وقت آگیاہے کہ اس فرسودہ سیٹس کو کے نظام کو تبدیل کیا جائے جماعت اسلامی نے اس کے لیے بھر پور جدوجہد کا آغاز کردیاہے ہماری تحریک کے دوسرے فیز کا آغاز کچھ روز بعد گوجرانوالہ سے ہوگا جلد جماعت کے مرکزی ذمہ داران کے اجلاس میں شیڈول کو آخری شکل دی جائے گی.

انہوں نے اس عہد کا اعادہ کیا کہ جماعت اسلامی ملک کو اسلامی اور خوشحال پاکستان بنا کر ہی دم لے گی ایک سوال کے جواب میں سینیٹرسر اج الحق نے کہاکہ اسرائیل امریکہ کی ناجائز اولاد ہے پاکستان اس کو کسی صورت قبول نہیں کرے گا ہمیں معلوم ہے کہ یہودی لابی اس کے لیے سرگرم ہے لیکن ہم یہ واضح کر دینا چاہتے ہیں کہ جس دن حکمرانوں نے اسرائیل کو تسلیم کیا، وہ دن ان کے اقتدار کا آخری دن ہو گا.

ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی کے پاس لانگ مارچ کا آپشن موجود ہے لیکن ابھی اس کا اعلان قبل از وقت ہوگا ہم چاہتے ہیں کہ حکومت اب مزید وقت ضائع کیے بغیرفوری طور پر عوام کے حق میں رائٹ ٹرن لے اگر ایسا نہیں ہوا تو لانگ مارچ حتمی ہے. انہوں نے کہاکہ پی ڈی ایم کو جلسے کرنے کا قانونی حق حاصل ہے حکمران اپوزیشن کے رہنماوں اور کارکنوں کے خلاف مقدمات ختم کرے سینیٹر سراج الحق نے معذور افراد کے لیے خصوصی تقریب منعقد کرنے پر الخدمت فاﺅنڈیشن کوتحسین پیش کیا انہوں نے کہاکہ الخدمت فاﺅنڈیشن نے نسل، مذہب سے بالاتر ہو کر انسانیت کی خدمت کے عظیم مشن میں بے پناہ کامیابیاں حاصل کی ہیں جن کو ملکی و عالمی سطح پر قدر کی نگاہ سے دیکھا جاتاہے.

انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت معذور افراد کے لیے مفت طبی و تعلیمی سہولتوں کا بندوبست کرے ان کو کم نرخوں پر اشیائے خوردو فراہم کی جائیں ان کو ٹرانسپورٹ کی مفت سہولتیں دی جائیں اور ان کو معاشرے کا کارگر شہری بنانے کے لیے کوئی کسر اٹھا نہ رکھی جائے.
حکومت کے خلاف لانگ مارچ کا آپشن زیر غورہے.امیر جماعت اسلامی

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments