اس بار کورونا عمرہ کے خواہشمند فرزندان توحید کیلئے رکاوٹ نہیں بنے گا

سعودیہ کی عمرہ سیزن پر پابندی کے حوالے سے زیر گردش افواہوں کی سختی سے تردید‘ وباء کے بڑھتے ہوئے کیسز کے باوجود عمرہ ادائیگی جاری رکھنے کا فیصلہ کرلیا گیا

Sajid Ali ساجد علی جمعہ 21 جنوری 2022 11:16

اس بار کورونا عمرہ کے خواہشمند فرزندان توحید کیلئے رکاوٹ نہیں بنے گا
ریاض ( اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین ۔ 21 جنوری 2022ء ) اس بار کورونا عمرہ کے خواہشمند فرزندان توحید کیلئے رکاوٹ نہیں بنے گا کیوں کہ وباء کے بڑھتے ہوئے کیسز کے باوجود عمرہ ادائیگی جاری رکھنے کا فیصلہ کرلیا گیا۔ عرب میڈیا کے مطابق سعودی عرب کی جانب سے کورونا کی نئی لہر میں عمرہ سیزن پر پابندی کے حوالے سے زیر گردش افواہوں کی سختی سے تردید کی گئی ہے ، اس ضمن میں سعودیہ کی وزارتِ حج و عمرہ کی طرف سے ایک بیان جاری کیا گیا ، جس میں عمرہ ادائیگی پر پابندی کے حوالے سے پھیلنے والی خبروں کی سختی سے تردید کی گئی ، وزارت کا کہنا ہے کہ کورونا کیسز میں اضافے کے باوجود عمرہ ادائیگی پر کوئی پابندی عائد نہیں کی جائے گی ، ابھی تک عمرہ ادائیگی اور مسجدالحرام و مسجد نبوی میں زائرین یا نمازیوں کی آمد پر پابندی کا معاملہ زیر غور نہیں آیا اور نہ ہی ایسا کوئی ارادہ ہے۔

(جاری ہے)

اسی طرح جنرل پریزیڈنسی کی طرف سے ان افواہوں کی سختی سے تردید کی گئی اور کہا گیا ہے کہ زائرین کو کورونا سے محفوظ رکھنے کے لیے ایس او پیز کا نفاذ کیا گیا ہے ، جن پر سختی سے عمل درآمد کیا جارہا ہے ، جس کے تحت زائرین اور نمازیوں کے لیے سماجی فاصلے اور ماسک کو لازمی قرار دیا گیا ہے۔ ادھر سعودی عرب کی وزارت حج و عمرہ نے ’ای عمرہ گیٹ‘ کے ذریعے ویزے کے اجراء کا طریقہ کار بتا دیا ، جس کے بعد اب عمرہ کے لیے پاکستان سے مقدس سرزمین جانا اور بھی آسان ہوگیا، ایک بیان میں وزارت حج و عمرہ نے کہا ہے کہ جن ممالک کے شہریوں پر مملکت آمد پر کوئی پابندی نہیں ہے وہ عمرہ ویزہ حاصل کرنے کے لیے سب سے پہلے ای عمرہ گیٹ وزٹ کریں جہاں سے عمرے کا خواہشمند شخص وزارت حج و عمرہ کی لائسنس ہولڈر ٹریولنگ ایجنسی یا کمپنی کا انتخاب کرے ، اس کے بعد مناسب پیکیج منتخب کرنے کے بعد پیکیج کی رقم ادا کرے ، یہ پیکیج رہائش اور ٹرانسپورٹ جیسی بنیادی سہولیات پر مشتمل ہوگا- بتایا گیا ہے کہ ای عمرہ گیٹ پر تمام ضروری کارروائی مکمل کرنے کے بعد عمرہ زائر کے لیے ضروری ہوگا کہ وہ ٹریولنگ ایجنسی یا متعلقہ کمپنی کے دفتر جاکر اپنا پاسپورٹ پیش کرے اور وہاں عمرہ پروگرام سے متعلق متعلقہ فارم پر کرے یہاں اسے اپنے ملک سے سعودیہ روانگی اور وہاں سے واپسی کی تاریخ کا بھی تعین کرنا ہوگا ، جب کہ اس سارے عمل کے لیے عمرہ زائر کو پیروی کے لیے سپیشل نمبر مہیا ہوگا ، جس کو دکھانے کے بعد سعودی وزارت خارجہ کے ماتحت ای ویزا سروس پلیٹ فارم سے عمرہ ویزہ کی درخواست پیش کی جاسکے گی ۔

معلوم ہوا ہے کہ عمرہ کے لیے اپنے ملک سے سعودی عرب کا سفر کرنے سے پہلے آمد و رفت کا ٹکٹ کنفرم ہونا لازمی ہے ، اس کے ساتھ ہی زائر نے میڈیکل انشورنس سکیم بھی حاصل کی ہوئی ہو جب کہ مملکت میں منظور شدہ کورونا ویکسین لگوانے کے بعد اس کی مصدقہ رپورٹ بھی ہمراہ ہونی چاہیئے، عمرہ کی ادائیگی اور مسجد نبوی کی زیارت کی تاریخ اور اصولی وقت حاصل کرنا بھی ضروری ہے۔

ریاض میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments