اُردو پوائنٹ پاکستان لاہورلاہور کی خبریںوزیراعلی پنجاب کون ؟ بنی گالا میں بڑا فیصلہ کر لیا گیا پی ٹی آئی رہنما ..

وزیراعلی پنجاب کون ؟ بنی گالا میں بڑا فیصلہ کر لیا گیا

پی ٹی آئی رہنما سردارعثمان بزدار کو وزیر اعلی پنجاب بنانے کا امکان ، میڈیا رپورٹس

لاہور (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 17 اگست 2018ء) : پاکستان تحریک انصاف کی طرف سے تا حال وزیر اعلی پنجاب کا نام سامنے نہیں آیا۔وزیر اعلی پنجاب کے ناموں کی ایک لمبی لسٹ ہے۔تاہم میڈیا رپورٹس کے مطابق بنی گالا میں وزیر اعلی پنجاب کے نام سے متعلق مشاورت میں سردار عثمان بزدار کا نام سامنے آیا ہے۔عثمان بزدار وزارت عظمی کے لیے مضبوط امیدوار تصور کیے جا رہے ہیں۔

عثمان بزدار نے تحریک انصاف کے ٹکٹ پر الیکشن لڑا اور 27ہزار 27 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔عثمان بزدارکے والد بھی تین بار پنجاب اسمبلی کا حصہ رہ چکے ہیں۔جب کہ عثمان بزدار مشرف دور میں ضلع ناظم تونسہ بھی رہ چکے ہیں۔ عثمان بزدار نے 2013ء میں ن لیگ کے ٹکٹ پر الیکشن لڑا تھا۔عثمان بزدار کو پیپلز پارٹی کے امیدوار نے شکست دی تھی۔

(خبر جاری ہے)


2018 کے انتخابات میں وہ تحریک انصاف کے ٹکٹ پر رکن صوبائی اسمبلی منتخب ہوئے تھے۔

عثمان بزدار جنوبی پنجاب محاذ کا بھی حصہ رہے ہیں۔یاد رہے اس سے پہلے سردار محمد خان لغاری کا نام بھی بطور وزیر اعلی پنجاب سامنے آیا تھا۔ سردار محمد خان لغاری معروف پارلیمنٹیرین سردار مقصود خان لغاری کے صاحبزادے ہیں۔ اس سے قبل لاہور سے منتخب ہونے والے پاکستان تحریک انصاف کے مراد راس کو پنجابکے وزارت اعلیٰ کے لیے منتخب کر لیے جانے کی خبریں بھی موصول ہوئی تھیں۔

ذرائع نے بتایا کہ پارٹی چئیرمین عمران خان نے جس نوجوان رہنما کو پنجاب کا وزیراعلٰی بنانے کا فیصلہ کیا ہے، وہ رہنما ممکنہ طور پر مراد راس ہیں۔واضح رہے کہ پاکستان تحریک انصاف نے تاحال وزارت اعلیٰ پنجاب کے لیے کسی اُمیدوار کو نامزد نہیں کیا جبکہ اپوزیشن جماعت مسلم لیگ ن نے حمزہ شہباز شریف کو وزارت اعلیٰ کا اُمیدوا نامزد کر رکھا ہے۔ اُمید کی جا رہی ہے ایک دو دنوں کے اندر ہی عمران خان بھی پنجاب کی وزارت اعلیٰ کے لیے کسی ایک نام کا حتمی اعلان کر دیں گے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

لاہور شہر کی مزید خبریں