امام الحق نے کپل دیو کا 36سال پرانا ریکارڈ توڑ ڈالا

امام الحق انگلینڈ کی سرزمین پر 150عنز بنانے والے کم عمر ترین کھلاڑی بن گئے

Usman Khadim Kamboh عثمان خادم کمبوہ بدھ مئی 00:24

امام الحق نے کپل دیو کا 36سال پرانا ریکارڈ توڑ ڈالا
لندن(اردوپوائنٹ اخبار تازہ ترین۔14مئی2019ء) انگلینڈ کے خلاف سیریز کے تیسرے ایک روزہ میچ میں 151 رنز کی شاندار اننگ کھیلی، اس سے قبل یہ اعزاز فخر زمان کے پاس تھا جنہوں نے 2 روز پہلے 138 رنز کی اننگ کھیلی تھی۔امام الحق نے انگلینڈ کے خلاف سیریز کے تیسرے ایک روزہ میچ میں شاندار سینچری اسکور کی اور کل 151 رنز کی اننگ کھیلی۔ یہ پاکستان کی جانب سے کسی بھی بلے باز کی انگلینڈ کے خلاف کھیلی جانے والی سب سے بڑی انفرادی اننگ ہے۔

اس سے قبل یہ اعزاز فخر زمان کے پاس تھا جنہوں نے 2 روز پہلے 138 رنز کی اننگ کھیلی تھی۔قومی کرکٹ ٹیم کے اوپنر بلےباز امام الحق نے انگلینڈ میں سابق بھارتی کرکٹر کپل دیو کا 36 سال پرانا ریکارڈ توڑ دیا۔ امام الحق برطانیہ کی سرزمین پر ون ڈے اننگز میں انفرادی طور پر 150 سکور بنانے والے کم عمر ترین کھلاڑی بن گئے۔

(جاری ہے)

انہوں نے یہ کارنامہ 23 سال 153 دن کی عمر میں سرانجام دیا ہے۔

اس سے پہلے سابق بھارتی کپتان کپل دیو نے 1983 میں 24 سال 163 دن کی عمر میں زمبابوے کیخلاف 175 سکور کی اننگز کھیلی تھی۔
 دوسری جانب پانچ ون ڈے میچز کی سیریز کے تیسرے مقابلے میں پاکستان نے انگلینڈ کو جیت کے لیے 359رنز کا ہدف دیدیا ہے ۔ برسٹول میں کھیلے جارہے میچ میں گرین شرٹس کے اوپنر پچھلے میچ کے مقابلے میں اس بار اچھا آغاز نہ دے سکے اور جلد ہی پہلی وکٹ گنوادی۔

دوسرے ون ڈے میں شاندار سنچری بنانے والے فخرزمان آج لمبی اننگز نہ کھیل سکے اور کرس ووکس کو وکٹ دے کر پویلین لوٹ گئے، وہ صرف 2 رنز ہی بناسکے۔بابر اعظم بھی صرف 15 رنز بناکر ووکس کی گیند پر کلین بولڈ ہوگئے۔ دو وکٹیں جلد گرنے کے بعد امام الحق اور حارث سہیل نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کی اور وکٹ گرنے کے سلسلے کو روکنے کے ساتھ ساتھ 68رنز کی شراکت داری قائم کی جس کے بعد حارث سہیل 41رنز بنا کر غیر ذمہ درانہ طریقے سے رن آﺅٹ ہوئے ،کپتان سرفراز احمد پانچویں نمبر پر کھیلنے آئے اور 27 رنز بناکر پویلین لوٹے، اس کے بعد آصف علی اور امام الحق نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کی اور سکور میں تیزی سے اضافہ کیا۔

امام الحق نے شاندار بیٹنگ کرتے ہوئے اپنے کیرئیر کی چھٹی سنچری بنائی، انہوں نے اپنی اننگز میں ایک چھکا اور 14 چوکے لگائے جب کہ آصف علی نے بھی 40 گیندوں پر نصف سنچری سکور کی،آصف علی52رنز بنا کر آﺅٹ ہوئے جبکہ امام الحق 151رنز کی عمدہ باری کھیلنے کے بعد پوویلین لوٹے، فہیم اشرف13رنز بنا کر کیرن کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آﺅٹ ہوئے،شاہین آفریدی 7رنز بنا کر آﺅٹ ہوئے،اس سے قبل انگلینڈ نے تیسرے ایک روزہ میچ میں ٹاس جیت کر پاکستانکو بیٹنگ کی دعوت دی ہے۔

پاکستانی ٹیم میں ایک تبدیلی کی گئی ہے، جنید خان کو یاسر شاہ کی جگہ میچ میں کھیلانے کا فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ فاسٹ بولر محمد حسنین کو اب تک سیریز میں موقع نہیں دیا گیا ہے۔ٹاس کے بعد سرفراز احمد نے اعتراف کیا کہ اگر ہم بھی ٹاس جیتے تو پہلے فیلڈنگ کرتے،ٹیم کو بیٹنگ اور بولنگ کے معاملے پر مزید توجہ دینے کی ضرورت ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ شاداب خان انشاءاللہ ورلڈ کپ ٹیم میں واپس آئیں گے،عامر کے بارے میں یقین سے نہیں کہہ سکتے،پہلے انہیں چکن پاکس سے نجات پانی چاہیے۔

انگلینڈ کی طرف سے جیسن روئے، جونی بریسٹو، جو روٹ،بین سٹوکس، معین علی، این مارگن، جوڈینلی، کرس ووکس، ڈیوڈ ویلی، ٹوم کرن اور لیام پلنکٹ میدان میں اتر رہے ہیں۔پاکستانی فائنل الیون فخر زمان،امام الحق،بابر اعظم، حارث سہیل، سرفراز احمد، آصف علی، عماد وسیم،فہیم اشرف، حسن علی، جنید خان اور شاہین شاہ آفریدی پر مشتمل ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 15/05/2019 - 00:24:04

Your Thoughts and Comments