عوامی جلسوں میں اداروں کے سربراہان کے خلاف نعرے لگانا قومی مفاد کیخلاف ہے‘شہبازشریف

فیصل آبادمیں جس نے نعرے لگائے اس کا پارٹی سے کوئی تعلق نہیں، آج مہنگائی پاکستان کا نمبر ون مسئلہ ہے اپوزیشن نے کمر کس لی ہے، حکومت کے جانے کا وقت آ گیا ہے ،سلیکٹڈ وزیراعظم نے پارلیمنٹ کو تالا لگا دیاہے‘میڈیاسے گفتگو

اتوار 24 اکتوبر 2021 18:40

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 24 اکتوبر2021ء) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر شہبازشریف نے کہاہے کہ فیصل آبادمیں جس نے نعرے لگائے اس کا مسلم لیگ (ن) سے کوئی تعلق نہیں،عوامی جلسوں میں اداروں کے سربراہان کے خلاف نعرے لگانا قومی مفاد کے خلاف ہے، آج مہنگائی پاکستان کا نمبر ون مسئلہ ہے، اپوزیشن نے اس کے خلاف کمر کس لی ہے، حکومت کے جانے کا وقت آ گیا ہے اور اس حکومت کو مزید برداشت نہیں کریں گے،قوم کی بد قسمتی ہے کہ سلیکٹڈ وزیراعظم نے پارلیمنٹ کو تالا لگا دیاہے، ہر چیز آرڈیننس پر چل رہی ہے،جو لوگ آئندہ وزیر اعظم کے حوالے سے مسلم لیگ (ن)میں اختلاف دیکھ کر دل پشوری کرنا چاہتے ہیں ان کویہ موقع کبھی نہیںملے گا ۔

ان خیالات کااظہارانہوں نے مسعودہ نصیر ویلفیئر ٹرسٹ کے زیر اہتمام تقریب میں شرکت کے موقع پر خطاب اور میڈیاسے گفتگوکرتے ہوئے کیا۔

(جاری ہے)

شہبازشریف نے کہا کہ کسی بھی ملک کے دفاع و سلامتی کیلئے مضبوط فوج ناگزیرہے، ادارے میں تقرر و تبادلے ان کا اپنا معاملہ ہے ،فیصل آباد میں جو نعرے لگے ہیںاس کا مسلم لیگ (ن)سے کوئی تعلق ہے نہ ہی وہ پارٹی کا کارکن یاکوئی عہدیدار تھا، اداروں کے سربراہوں کے خلاف نعرے نہیں لگنے چاہئیںیہ قومی مفاد کے خلاف ہے ،کسی بھی ملک کے دفاع وسلامتی کیلئے مضبوط پیشہ وارانہ فوج ناگزیر ہے ،پاکستان دفاع و امن و سلامتی کیلئے مضبوط فوج بنیادی بات ہے ،ادارے میں تقرر و تبادلے ان کا اپنا معاملہ ہے ۔

انہوںنے کہاکہ قوم کی خواہش ہے افغانستان میں امن قائم ہو ،(ن) لیگ سمیت قوم کسی بھی بین الاقوامی سازش کوکامیاب نہیں ہونے دے گی ،دفاع پر آنچ نہیں آنے دیں گے ۔انہوںنے کہاکہ پارلیمنٹ میں آئین کی حکمرانی خارجی و داخلی معاملات طے ہوتے ہیں لیکن بدقسمتی ہے کہ سلیکٹڈ وزیراعظم نے پارلیمنٹ کو تالا لگا رکھا ہے ،ہر چیز صدارتی آرڈیننس سے چلائی جا رہی ہے ،معیشت کو نڈھال و برباد کر دیاہے، ڈالر 175کی اڑان کو پہنچ چکا ہے ،اگر یہی حالت رہی تو سب اکٹھے بھی ہو جائیں تو ملک کو خراب حالات سے نہیں بچا سکتے۔

انہوںنے کہاکہ مہنگائی نمبر ون مسئلہ ہے، اپوزیشن اس کے خلاف نکل کھڑی ہوئی ہے۔انہوںنے کہا کہ سنا ہے وزیر اعظم 80افراد کا وفد لے کر سعودی عرب گئے ،جو بجلی گیس پیٹرول مہنگا ہونے پر کہتا تھا کہ وزیر اعظم کرپٹ ہے آج ان کے دورمیں مہنگائی کے حالات بدترین ہو چکے ہیں،74سال میں دیکھتی آنکھ نے دل خراش منظر نہیں دیکھا ،آج لوگ فاقہ کشی کررہے ہیں ،اس حکومت کو عوام اورنہ کوئی اور برداشت کرے گا ،انہیں عوام کے سامنے بے نقاب کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ جو لوگ آئندہ وزیر اعظم کے حوالے سے مسلم لیگ (ن)میں اختلاف دیکھ کر دل پشوری کرنا چاہتے ہیں ان کویہ موقع کبھی نہیںملے گا ۔انہوںنے کہاکہ ہم نے اپنے دور میں ڈینگی کو کنٹرول کیا ،صبح سے لے کر شام تک ہم ڈینگی کو کنٹرول کرنے کیلئے میدان میں نکلے، ہم نے قریہ قریہ سپرے کیا ،سکولوں میں لیکچر دئیے اور ڈاکٹرز کو بیرون ملک ٹریننگ دلوائی لیکن یہ حکومت غفلت میں پڑی ہے۔

ہم نے کہیںدوبارہ مچھر پیدا نہیں ہونے دیا ،نوے روپے ڈینگی ٹیسٹ کا پابند کیا ،خان کی لیبارٹری ہو یا کوئی اور ٹیس کو نوے روپے یقینی کروایا ،ہسپتالوں میں جانا ہوتا تو عوام کا سیلاب ہوتاتھا ،ہزاروں لوگ پریشان حال ہوتے تھے ،ہم نے ڈینگی پر بریگیڈ اور کتابچہ بنایا ۔ شہباز شریف نے مزید کہا کہ اس ٹرسٹ میں یتیم بچے بچیوں کی کفالت کی جاتی ہے جس پر دل کی اتھارہ گہرائیوں سے مبارکباد دیتاہوں ، یتیم بچے و بچیوں کو ملا ہوں جن کے والدین سر پر نہیں، انہوں نے تمام مشکلات و مایوسی کے باوجود ہمت نہیں ہاری، یتیم بچوں کی کفالت سے بڑا کوئی عمل نہیں جس سے رب کی خوشنودی حاصل ہو،رزق حلال کی کمائی سے بچوں کے سرپر دست شفت رکھ رہے ہیں جس کا بے شمار اجر ہے۔

شہبازشریف نے کہاکہ زندگی کے اندھے تھپیڑوں کے باوجود یہاںروشنی گھر خوراک تعلیم علاج و معالجہ ہے،اسی ماڈل کو سامنے رکھتے ہوئے غریبوں و مسکینوں کیلئے دانش سکول بنائے،ایچی سن سکول وکالج میں امرا ء و اشرافیہ کے بچے جا سکتے ہیں، دانش سکول پر بے پناہ تنقید کے نشتر برسائے اور تنقید کرنے والوں کا تعلق اشرافیہ و امرا ء سے تھا،دانش سکول کا فلسفہ اسی چیز کی غمازی کرتاہے کہ یتیم بھی اعلی تعلیم حاصل کریں،دانش سکول کے بچوں نے امتحانات میں نمایاں پوزیشن حاصل کیں ۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments