والدہ نے دو بیٹیوں کی گردن چھری سے کاٹ ڈالی

اتوار اپریل 12:20

بیروت(اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ اتوار اپریل ء)لبنان کے شمال میں واقع قصبے مشتی حمود میں ایک ماں نے گھر کے اندر اپنی دو بچیوں کا گلا کاٹ دیا۔عرب ٹی وی کے مطابق لبنانی خاتون رقیّہ العسّاف نے جس کی عمر 20 سے 30 سال کے درمیان ہے، باورچی خانے سے بڑی چھری لے کر کمرے میں سوئی اپنی دو بچیوں 9 سالہ عائشہ اور 6 سالہ سارہ کے گلوں پر پھیر دی۔

اس کے نتیجے میں عائشہ فوری طور پر دم توڑ گئی جب کہ سارہ گردن میں شدید زخم آنے کے باوجود موت کے منہ میں جانے سے بچ گئی۔سارہ کو فوری طور پر ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹروں کا کہنا تھا کہ اب اس کی حالت خطرے سے باہر ہے۔ بچیوں کی ماں نے نے جٴْرم کا ارتکاب کرنے کے فوری بعد قصبے میں واقع لبنانی فوج کی نزدیکی چیک پوسٹ کا رخ کیا اور اپنی بیٹیوں کا گلا کاٹنے کا اعتراف کرتے ہوئے خود کو فوجی اہل کاروں کے حوالے کر دیا۔

(جاری ہے)

بچیوں کی ماں نفسیاتی مریضہ ہے اور اس کا علاج چل رہا ہے۔ تقریبا ایک برس قبل اس نے خود کشی کی کوشش کے علاوہ اپنی دونوں بیٹیوں کو اسی طرح سے موت کی نیند سلانے کی کوشش بھی کی تھی تاہم وہ کامیاب نہ ہو سکی۔ قصبے کے لوگوں کا کہنا ہے کہ رقیّہ اپنی بیٹیوں سے بے پناہ محبت کرتی ہے اور اس کے نفسیاتی مرض نے ہی خود کو جان سے مار دینے کی کوشش اور دونوں بیٹیوں کے خلاف اقدام قتل پر مجبور کر دیا۔

Your Thoughts and Comments