بی آئی ایس پی کے تحت 2012 سے 2017ء تک کے عرصہ 6 برس کے دوران پروگرام سے استفادہ کرنے والے 5.28 ملین میں 466.24 ارب روپے تقسیم

اتوار اپریل 20:20

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبار آن لائن۔ اتوار اپریل ء)اسلام آباد(ایپیپی) بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام (بی آئی ایس پی)کے تحت 2012 سے 2017ء تک کے عرصہ 6 برس کے دوران پروگرام سے استفادہ کرنے والے 5.28 ملین استفادہ کرنے والوں میں 466.24 ارب روپے تقسیم کئے گئے۔’’اے پی پی‘‘ کے پاس دستیاب بی آئی ایس پی کی ایک سرکاری دستاویز کے مطابق 2012 میں پروگرام سے استفادہ کرنے والے 42 لاکھ 13ہزار 643مستحقین میں 42.30 ارب روپے کی رقوم تقسیم کی گئی تھیں۔

2013 میں 42 لاکھ 17 ہزار 977 استفادہ کرنے والوں میں 53.033 ارب روپے کی رقوم تقسیم کی گئیں۔اسی طرح 2014 میں استفادہ کرنے والون کی تعداد بڑھ کر 47 لاکھ 32 ہزار 263 ہو گئی اور تقسیم کی گئی رقوم بھی بڑھا کر تقریبادوگنا ہو گئیں اور76.04 ارب روپے تقسیم کئے گئے۔

(جاری ہے)

2015 میں پروگرام سے مستفید ہونے والوں کی تعداد 51 لاکھ 2 ہزار 529 تھے اور تقسیم کی گئی رقوم بڑھا کر 92.21 ارب روپے کر دی گئیں ۔

2016 میں استفادہ کرنے والوں کی تعداد 52 لاکھ 63 ہزار 221ہو گئی اور استفادہ کرنے والوں میں 99.94 ارب روپے تقسیم کئے گئے اور 2017 میں استفادہ کرنے والوں کی تعداد 52 لاکھ86 ہزار122 ہو گئی اور پروگرام سے استفادہ کرنے والوں میں 102.75 ارب روپے تقسیم کئے گئے۔نادرا کی طرف سے تصدیق اور سکروٹنی کے عمل کے ذریعے ایک لاکھ 25 ہزار714 مشتبہ استفادہ کرنے والے افراد کی ادائیگیاں بھی اس دوران روکی گئی ہیں جن میں سندھ سے 55 ہزار 773،پنجاب سے 44 ہزار 603،خیبر پختونخوا سے 16 ہزار 35،بلوچستان سے 6ہزار 373،آزاد کشمیر سے 1880،گلگت بلتستان سے 1050مشتبہ استفادہ کرنے والے افراد کی ادائیگیاں روکی گئی ہیں۔ اس غفلت کے ارتکاب پر 69 عملہ کے حکام کو پہلے ہی شو کاذ نوٹس جاری کئے جا چکے ہیں اور انکوائری کی جا رہی ہے۔

Your Thoughts and Comments