چین کی ترقی کسی کیلئے خطرہ نہیں

13ویں نیشنل پیپلز کانفرنس سے خطاب میں چینی صدرکی اقوام عالم کوس منصفانہ نظام کی یقین دہانی تین ہزار سے زیاہ مندوبین کی آئینی ترمیمی بل کے ذریعے قانون نگرانی ،محکمہ جاتی ڈھانچے کی اصلاحات اور کمیونسٹ پارٹی سے متعلق فیصلوں کی توثیق

جمعرات اپریل

cheen ki taraqqi kisi ke liye khatrah nahi
چین کے صدر شی جن پنگ نے واضح کرتے ہوئے کہا ہے کہ چین کی ترقی کسی بھی ملک کے لئے خطرہ نہیں اور نہ ہی کوئی طاقت چینی عوام کو اپنے خواب کی تعبیر پانے سے نہیں روک سکتی ہے، دی بیلٹ اینڈ روڈ کی تعمیر کو فروغ دے کر پوری دنیا کی ترقی اور منصفانہ نظام کیلئے اپنا کردار ادا کریں گے۔ صدر چین شی جن پنگ نے کہا آئین کے مطابق اپنے فرائض انجام دیتا رہوں گا ، کوئی بھی علیحدگی پسندانہ کاروائی قطعی طور پر ناکامی سے دوچار ہوگی اور ایسا کرنے والے کو مثالی سزا دی جائے گی۔

چائنہ ریڈیو انٹرنیشنل کے مطابق چین کی تیرویں نیشنل پیپلز کانگریس کے اختتامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صدر شی جن پنگ نے پرزور الفاظ میں کہا کہ چینی خصوصیات کا حال سوشلزم کا نیا دور ہر ایک چینی کا ہے۔ ہمارے اتحاد اور مشترکہ کوششوں کی بدولت کوئی بھی طاقت چینی عوام کو اپنے خواب کو پورا کرنے سے نہیں روک سکتی۔

(جاری ہے)

انہوں نے چین کے سرکاری اہل کاروں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ انہیں ہمیشہ یاد رکھنا چاہیے کہ ان کا ملک چین ہے۔

وہ ہمیشہ عوام کو فوقیت دیں گے۔ ہمیشہ عوام کے لئے خدمات سرانجام دیں گے اور عوام کے مفادات اور خوشحالی کے لئے بھر پورکوششیں جاری رہیں گی۔ صدر شی جن پنگ نے اس بات پر زور دیا کہ ملک کے آئین میں دیے گئے حقوق عوام کے لیے ہیں۔ عوام پر اعتماد ہوں گے تو ملک کا مستقبل روشن اورمستحکم ہوگا۔ صدر شی جن پنگ نے کہا کہ قومی خودمختاسری و علاقائی سا لمیت کا تحفظ اور قومی اتحاد تمام چینیوں کی اجتمائی خواہش ہے اورچینی قوم کا بنیادی مفاد بھی اسی میں مضمر ہے۔

اس کے پیش نظر کوئی بھی علیحدگی پسندانہ کارروائی کامیاب نہ ہو سکے گی۔ ایسے عمل کی عوام مذمت کریں گے اور ایسے عمل کی تاریخ میں مذ مت کی جائے گی۔ صدر شی نے کہا کہ ان کا ملک کبھی بھی دیگر ممالک کے مفادات کو نظر انداز کرتے ہوئے چین کی ترقی کو فروغ نہیں دے گا۔ چین کی ترقی کسی بھی ملک کے لئے خطرہ نہیں۔ چین بین الاقوامی سطح پرانصاف کے تحفظ کے لئے کوشاں رہے گا۔

اور اس کے دی بیلٹ اینڈ روڈ تعمیر وترقی کے منصوبے پوری دنیا کی ترقی کے لئے اپنا کردار ادا کریں گے۔ چین کی تیرویں نیشنل پیپلز کانگریس کا اجلاس اس اعلان کے ساتھ اختتام پذیر ہوا ہے کہ نئے عہد میں چین کی خصوصیات کے حامل شی جن پنگ کا سوشلسٹ نظریہ ملک و قوم کا رہنما نظریہ ہے۔ اجلاس میں تین ہزار سے زیادہ مندوبین نے آئینی ترمیمی بل، قانو ن نگرانی ریاستی کونسل کے محکمہ جاتی ڈھانچے کی اصلاحات ،حکومتی ورکنگ رپورٹ اور دیگر رپورٹس کا جائزہ لیا اور منظوری دی ،آئین میں چینی کمیونسٹ پارٹی کی رہنما حیثیت کی توثیق کی گئی۔

چائنہ ریڈیو انٹرنیشنل کے مطابق چین کی تیرویں نیشنل پیپلز کانگریس کے پہلے اجلاس کی اختتامی تقریب بیجنگ میں منعقد ہوئی۔ قومی عوامی کانگریس کے مذکورہ اجلاس میں تین ہزار سے زیادہ مندوبین نے آئینی ترمیمی بل، قانون نگرانی ، ریاستی کونسل کے محکمہ جاتی ڈھانچے کی اصلاحات ، حکومتی ورکنگ رپورٹ اور دیگر رپورٹس کا جائزہ لیا اور منظوری دی۔

علاوہ ازیں اجلاس میں ملک کی نئی قیادت کا انتخاب بھی کیا گیا، اجلاس میں رائے شماری کے ذریعے حکومت کی ورکنگ رپورٹ قانون نگرانی دو ہزار اٹھارہ میں چین کی سماجی و اقتصادی ترقی کے منصوبے، مرکزی اور مقامی حکومتوں کے بجٹ ،قومی عوامی کانگریس کی مجلس قائمہ کی ورکنگ رپورٹ سپریم عوامی عدالت اور سپریم عوای پروکیوٹریٹ کی ورکنگ رپورٹ کی منظوری دی گئی۔

قومی عوامی کانگریس کی مجلس قائمہ کے چیئر مین لی جین شونے اختتامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کانگریس کی مجلس قائمہ کے چیئرمین لی جین شونے اس بات پر زور دیا کہ ملک کے آئین میں چینی کمیونسٹ پارٹی کی رہنما کی حیثیت کی توثیق کی گئی ہے۔ تاریخ اور عوام نے ہی چینی کمیونسٹ پارٹی کا انتخاب کیا ہے۔ دوسری طرف عوامی کانگریس کا نظام چین کا نمایاں خاصیت کا مخصوص سیاسی نظام ہے۔ اس نظام کو زیادہ بہتر انداز میں بروئے کار لایا جائیگا۔

Your Thoughts and Comments

cheen ki taraqqi kisi ke liye khatrah nahi is a international article, and listed in the articles section of the site. It was published on 26 April 2018 and is famous in international category. Stay up to date with latest issues and happenings around the world with UrduPoint articles.