عمان میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 372 نئے کیسز سامنے آ گئے

مملکت میں کورونا کے مریضوں کی مجموعی گنتی 6,043تک جا پہنچی، 27 افراد ہلاک ہو چکے ہیں

Muhammad Irfan محمد عرفان جمعرات مئی 11:51

عمان میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 372 نئے کیسز سامنے آ گئے
مسقط(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 21مئی 2020ء) خلیجی ریاست عمان میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا کے مزید 372 کیسز سامنے آئے ہیں ، جس کے بعد مملکت میں کورونا سے متاثرہ افراد کی مجموعی گنتی 6,043 تک جا پہنچی ہے۔ نئے مریضوں میں220 تارکین شامل ہیں جبکہ مقامی افراد کی گنتی152 ریکارڈ کی گئی ہے ۔ وزارت صحت کے مطابق گزشتہ روز مملکت میں کورونا کا ایک اور مریض دم توڑ گیا، جو کہ تارکِ وطن تھا۔

اس نئی ہلاکت کے بعد مملکت میں کورونا سے مرنے والوں کی مجموعی گنتی 27 ہو گئی ہے۔ درجنوں افراد آئی سی یو میں داخل ہیں۔ جبکہ 1,661 صحت یاب ہو چکے ہیں۔واضح رہے کہ عمان میں عید الفطر کے اجتماعات پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ سلطنت کے سلطان نے کورونا کے باعث عید کے اجتماعات پر پابندی کا اعلان کرتے ہوئے خلاف ورزی کرنے والوں کو جرمانے اور گرفتاری کا حکم دے دیا ہے۔

(جاری ہے)

عمان کے سلطان نے کہا ہے کہ وبا کے دور میں روایات پر عمل کرنا خطرناک ہوسکتا ے اس لیے عید کے اجتماعات نہیں ہوں گے۔اس کے ساتھ ہی سپریم کمیٹی نے پولیس کو حکم دیا ہے کہ اس حوالے سے قانون شکنی کرنے والوں پر جرمانے عائد کیے جائیں اور عارضی گرفتاری عمل میں لائی جائے۔ اس کے ساتھ ہی کمیٹی نے یہ بھی حکم دیا ہے کہ ملک میں ہر شخص تمام کمرشل اور صنعتی جگہوں پر ماسک پہن کر جائے گا، اس کے علاوہ پبلک اور پرائیویٹ ٹرانسپورٹ میں بھی ماسک پہننا لازمی ہوگا۔

وزارت صحت نے ایک بیان میں لوگوں پر زوردیا ہے کہ وہ سماجی فاصلہ اختیار کرنے اور الگ تھلگ رہنے کے لیے رہ نما ہدایات پر عمل درآمد کریں تاکہ کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکا جاسکے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ ”عزم کے ساتھ صحت کی تنہائی اور سماجی فاصلہ اختیار کرکے ہم خود بچے رہیں گے اور اپنے خاندانوں اور کمیونٹی میں بھی کرونا وائرس کو پھیلنے سے روک سکیں گے۔

“اومانی حکومت نے سلطنت میں کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے سخت اقدامات کیے تھے۔دارالحکومت مسقط اور دوسرے بڑے شہروں میں لاک ڈاوٴن نافذ کردیا گیا تھا اور اس میں مئی کے آخر تک توسیع کردی گئی ہے۔ سلطنت بھر میں رمضان المبارک میں اجتماعات پر پابندی عاید ہے۔اس کے علاوہ عوامی ٹرانسپورٹ بھی معطل کر رکھی ہے۔بسیں ، فراری اور ٹیکسیاں چلانے پر پابندی عاید ہے۔ مساجد ، ریستوران ، کافی شاپس بھی بند ہیں البتہ روزمرہ استعمال کی اشیاء کی دکانیں اور دوا خانے کھلے ہیں۔نیز بعض کاروباروں کو کڑی شرائط کے ساتھ حال ہی میں کھولنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔اومانی حکومت کی جانب سے مملکت بھر میں کورونا کے مریضوں کی تشخیص کے لیے مفت ٹیسٹ کیے جا رہے ہیں۔

مسقط میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments