ہزارسی سی سے کم پاورکی گاڑیوں کی فروخت میں سالانہ بنیادوں پر28 فیصد کی کمی ریکارڈ

ہزارسی سی سے کم پاورکی گاڑیوں کی فروخت میں سالانہ بنیادوں پر28  فیصد ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 25 جنوری2023ء) ملک میں ایک ہزارسی سی سے کم پاورکی گاڑیوں کی فروخت میں جاری مالی سال کے پہلے 6 ماہ میں سالانہ بنیادوں پر28.54 فیصدکی کمی ریکارڈکی گئی ہے ۔آل پاکستان آٹومومینوفیکچررزایسوسی ایشن کے اعدادوشمارکے مطابق جولائی سے لیکردسمبر2022 تک کی مدت میں ایک ہزارسی سی گاڑیوں کے 30,050 یونٹس کی فروخت ریکارڈکی گئی جوگزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے مقابلہ میں 28.54 فیصدکم ہے، گزشتہ مالی سال کی اسی مدت میں ملک میں ایک ہزارسی سی سے کم پاورکی گاڑیوں کے 38,629 یونٹس کی فروخت ریکارڈکی گئی، دسمبرمیں ایک ہزارسی سی سے کم پاورکے 7,362 یونٹس گاڑیوں کی فروخت ریکارڈکی گئی جو دسمبر2021 میں 10,235یونٹس تھیں۔

اعدادوشمارکے مطابق جاری مالی سال کے پہلے 6 ماہ میں ملک میں ایک ہزارسی سی سے کم پاورکے 30,730 یونٹس کی پیداوارریکارڈکی گئی جوگزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے مقابلہ میں 15.31 فیصدکم ہے، گزشتہ مالی سال کی اسی مدت میں ملک میں ایک ہزارسی سی سے کم پاورکے 35,437 یونٹس کاروں کی پیداوارریکارڈکی گئی تھی۔

(جاری ہے)

اعدادوشمارکے مطابق جولائی سے لیکردسمبرتک کی مدت میں ملک میں سوزوکی بولان کے 3,257 یونٹس گاڑیوں کی پیداوار اور2,436 یونٹس کی فروخت ریکارڈکی گئی، گزشتہ مالی سال کی اسی مدت میں ملک میں سوزوکی بولان کے 5,951 یونٹس گاڑیوں کی پیداوار اور6,241 یونٹس کی فروخت ریکارڈکی گئی، اسی طرح اسی مدت میں ملک میں سوزوکی آلٹو کے 27,473 یونٹس گاڑیوں کی پیداوار اور27,614 یونٹس کی فروخت ریکارڈکی گئی جوگزشتہ مالی سال کی اسی مدت میں بالترتیب 29,486 یونٹس اور32,388 یونٹس تھیں۔

\395

Your Thoughts and Comments