اُردو پوائنٹ پاکستان اسلام آباداسلام آباد کی خبریںضمنی انتخاب میں مسلم لیگ ن اور پاکستان تحریک انصاف قومی اسمبلی کی چار،چار ..

ضمنی انتخاب میں مسلم لیگ ن اور پاکستان تحریک انصاف قومی اسمبلی کی چار،چار نشستوں پر کامیاب

پنجاب اسمبلی میں مسلم لیگ ن 6، پی ٹی آئی 5 نشستوں پر کامیاب ہوئی

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 15 اکتوبر 2018ء): ملک بھرمیں گذشتہ روز ضمنی انتخاب کے لیے پولنگ ہوگئی جس کے بعد غیر سرکاری غیر حتمی نتائج آنے کا سلسلہ آنا شروع ہوا۔ اب تک سامنے آنے والے غیر سرکاری غیر حتمی نتائج کے مطابق پاکستان تحریک انصاف اور مسلم لیگ ن قومی اسمبلی کی 4، 4 جبکہ مسلم لیگ ق قومی اسمبلی کی دو نشستوں پر کامیاب ہوئی۔

این اے 53 اسلام آباد سے پاکستان تحریک انصاف کے اُمیدوار علی نواز اعوان،راولپنڈی کے این اے 60 پر پاکستان تحریک انصاف کےاُمیدوار شیخ راشد،این اے 63 راولپنڈی سے پاکستان تحریک انصاف کے اُمیدوار منصور حیات خان اور این اے 243 کراچی سے پاکستان تحریک انصاف کےاُمیدوار عالمگیر خان کامیاب ہوئے۔ این اے 56 اٹک میں مسلم لیگ ن کے اُمیدوار سہیل خان،این اے 103 فیصل آباد سے مسلم لیگ ن کے اُمیدوار علی گوہر خان،لاہور کے حلقہ 124 میں مسلم لیگ ن کے اُمیدوار شاہد خاقان عباسی اور این اے 131 لاہور میں مسلم لیگ ن کے اُمیدوار خواجہ سعد رفیق کامیاب ہوئے۔

(خبر جاری ہے)

این اے 65 چکوال میں مسلم لیگ ق کے اُمیدوار چوہدری سالک حسین اور این اے 69 گجرات میں مسلم لیگ ق کےاُمیدوار مونس الہیٰ کامیاب ہوئے۔ اس کے علاوہ پنجاب اسمبلی میں ہونے والے ضمنی انتخاب میں مسلم لیگ ن نے 6،پاکستان تحریک انصاف نے 5 اور 2 آزاد اُمیدواروں نے کامیابی حاصل کی۔سندھ اسمبلی کی دونوں نشستوں پر پاکستان پیپلز پارٹی نے کامیابی حاصل کی جبکہ خیبرپختونخواہ اسمبلی میں پاکستان تحریک انصاف نے 9 میں سے 6 نشستیں حاصل کیں جبکہ عوامی نیشنل پارٹی نے 2 اور مسلم لیگ ن نے ایک نشست حاصل کی۔

بلوچستان اسمبلی میں بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) نے ایک اور ایک آزاد اُمیدوار نے کامیابی حاصل کی۔ واضح رہے کہ ملک بھر میں قومی اور صوبائی اسمبلی کے35 حلقوں میں ضمنی الیکشن 2018ء کئے لیے پولنگ کا عمل گذشتہ روز صبح 8 بجے شروع ہوا جو شام 5 بجے تک بلا تعطل جاری رہا۔ ضمنی الیکشن کے موقع پر قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ ساتھ باقی تمام متعلقہ ادارے ریسکیو1122، سول ڈیفنس و دیگر بھی الرٹ ہیں۔

الیکشن میں پہلی بار اوورسیز پاکستانیوں نے حق رائے دہی استعمال کیاالیکشن کمیشن آف پاکستان نے ضمنی انتخابات والے 35 حلقوں کے لئے پانچ خصوصی صنفی شکایات ڈیسک بھی قائم کیے۔ ضمنی انتخابات کیلئے اسلام آباد ہیڈ کوارٹرز میں مرکزی کنٹرول روم بھی قائم کیا گیا۔ الیکشن کمیشن کے مطابق ضمنی انتخابات میں پولنگ کے عمل کے دوران کُل 23 شکایا ت موصول ہوئیں۔ انٹرنیٹ ووٹنگ کا ٹرن آؤٹ 84 فیصد رہا ہے۔ قومی اسمبلی کے لیے 5 ہزار117 انٹرنیٹ ووٹ کاسٹ ہوئے، صوبائی اسمبلی کے لیے ایک ہزار 116 ووٹ کاسٹ کیے گئے۔ ضمنی انتخاب میں76 فیصد اوورسیز پاکستانیوں نے ووٹ کاسٹ کیے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

اسلام آباد شہر کی مزید خبریں