Live Updates

پیپلزپارٹی نے نہ ماضی میں ڈیل کی نہ آئندہ کرے گی ،مارشل کا مقابلہ کیا ایسے پارٹی نہیں چھوڑینگے ‘قمرزمان کائرہ

حکومت نے قوم کو تپتی جگہ پر بٹھا دیا ہے ،ملک میں جو آگ لگا رکھی ہے، آپ کے اپنے پائوں جلنے والے ہیں،اپوزیشن محاذ بنائے گی اور حکومت کو چلتا کرے گی ‘میڈیا سے گفتگو

ہفتہ ستمبر 18:57

پیپلزپارٹی نے نہ ماضی میں ڈیل کی نہ آئندہ کرے گی ،مارشل کا مقابلہ کیا ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 21 ستمبر2019ء) پیپلز پارٹی وسطی پنجاب کے صدر قمر زمان نے کہا ہے کہ کرپشن بہانہ سندھ حکومت نشانہ ہے، اگر مراد علی شاہ کو گرفتار کیا گیا تو وہی وزیراعلی رہیں گے،پیپلزپارٹی نے نہ ماضی میں ڈیل کی نہ آئندہ کرے گی اور ہم آپ کو بھی ڈیل کریں گے، میرے رشتہ داروں کو ہراساں کیا جا رہا ہے، ہم نے مارشل کا مقابلہ کیا ایسے پارٹی نہیں چھوڑیں گے،پہلے ڈینگی کا مقابلہ کر لو پھر ہمارے مقابلے کی طرف آنا، چند لوگوں کو معطل کرنے سے کیا مسئلہ حل ہو جائے گا،مولانا فضل الرحمان نکل رہے ہیں ہم بھی نکلیں گے، اپوزیشن محاذ بنائے گی اور اس حکومت کو چلتا کرے گی ،پاکستان سے غربت مکانے نہیں یہ لوگ غریب مکانے آ گئے، ایک طرف بیروزگاری ہے دوسری طرف بینظیرانکم سپورٹ پروگرام کے کارڈ بلاک کر دئیے ۔

(جاری ہے)

ان خیالات کااظہارانہوںنے پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی سالگرہ کا کیک کاٹنے کی تقریب اور شعبہ خواتین پنجاب کی ایگزیکٹیو کونسل کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ قمرزمان کائرہ نے کہاکہ کشمیر، محرم الحرام اور ہماری قیادت کیخلاف انتقامی کارروائیاں کی وجہ سے سادگی سے تقریب منا رہے ہیں۔ایسا لگتا ہے جیسے سارا عذاب سندھ میں آگیا ہے لیکن پھر بھی سندھ حکومت گرانا آپ کے بس کی بات نہیں ہے۔

کشکول توڑنے کی دعویدارحکومت 40ارب ڈالر قرضہ لینے کا پروگرام بنا رہی ہے، خبر ہے یہ نیشنل بنک اور اسٹیٹ لائف بیچنا چاہ رہے ہیں لیکن ادارے بیچ کر ملک چلانا ہے تو اسے کسی میٹرک پاس اسٹوڈنٹ کے حوالے کر دیں۔قمر زمان کائرہ نے کہاکہ پیپلزپارٹی نے نہ ماضی میں ڈیل کی نہ آئندہ کرے گی اور ہم آپ کو بھی ڈیل کریں گے،جو آگ آپ نے جلائی ہے اس میں آپ کے پائوں جلنے والے ہیں، پہلے ڈینگی کا مقابلہ کر لو پھر ہمارے مقابلے کی طرف آنا، چند لوگوں کو معطل کرنے سے کیا مسئلہ حل ہو جائے گا، پاکستان سے غریب مکانی نہیں یہ لوگ غریب مکانے آ گئے، ایک طرف بیروزگاری ہے دوسری طرف بینظیرانکم سپورٹ پروگرام کے کارڈ بلاک کر دئیے ۔

پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما نے کہا کہ منیجرزاور انسٹالرز آج بھی سمجھتے ہیں ان کو ساتھ لے کر چلنا ہے، مولانا فضل الرحمان نکل رہے ہیں ہم بھی نکلیں گے، اپوزیشن محاذ بنائے گی اور اس حکومت کو چلتا کرے گی جب کہ موجودہ حکومت کے دور میں15کھرب کی بے ضابطگیاں سامنے آئی ہیں، یہ یوٹرن لیتے ہیں یا انڈر ٹریننگ لوگ رکھتے ہیں۔قمر زمان کائرہ کا کہنا تھا کہ پیپلزپارٹی اور سندھ پر فوکس ہے، سارے کیس شروع ہو گئے ہیں، ایسے لگتا ہے جیسے سارا عذاب سندھ میں آ گیا ہے لیکن اس طرح سندھ حکومت نہیں گرے گی آپ کے آئین سے ماورا جانا پڑے گا، سندھ حکومت گرانا آپ کے بس کی بات نہیں جب کہ فریال اور آصف زرداری کو جیل میں رکھنے کا منصوبہ ناکام ہو گیا، آرڈیننس سے حکومت گرا کر ملک چلائیں گے تو ہم ایسا نہیں کرنے دیں گے۔

قمر زمان کائرہ کا کہنا ہے کہ کرپشن بہانہ سندھ حکومت نشانہ ہے، اگر مراد علی شاہ کو گرفتار کیا گیا تو وہی وزیراعلی رہیں گے۔ملک میں ہرطبقہ پریشان ہے۔ پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما خورشید شاہ کو گرفتار کر لیا گیا ہے، ان پر 500 ارب روپے کا کیس ڈالا گیا ہے، خورشید شاہ کیخلاف جائیدادوں کی فرضی کہانی ہے۔ زرداری پر اربوں روپے کا الزام لگایا گیا چالان ڈیڑھ کا کروڑکا سامنے آیا۔

میرے رشتہ داروں کو ہراساں کیا جا رہا ہے، ہم نے مارشل کا مقابلہ کیا ایسے پارٹی نہیں چھوڑیں گے۔کیا پنجاب میں کرپشن کے کیسزنہیں ہیں میڈیا کا فوکس صرف سندھ کیوں ہی مالم جبہ کیس پرکوئی توجہ نہیں، ایسے لگتا ہے ۔قمر زمان کائرہ کا کہنا تھا کہ احتساب کے نام پر ملک میں جو کچھ ہو رہا ہے اس کی مذمت کرتے ہیں، ہماری اوراپوزیشن کی قیادت کوٹارگٹ کیا گیا۔

ایک سال ہوگیا،ڈاکٹرعاصم کیس کا ابھی فیصلہ نہیں ہو رہا۔ سندھ حکومت گرانا آپ کے بس کی بات نہیں ہے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے گن گانے والوں نے کشمیر کا مقدمہ پھنس کر رکھ دیا ہے۔ انہوںنے کہاکہ چونیاں واقعے کے تمام سفاک ملزموں کو گرفتار کر کے کڑی سزا دی جائے۔اوور سیز پاکستانیوں کے بچوں کی پاکستانی تعلیمی اداروں میں خصوصی داخلے کی سہولت ختم کر دی گئی ہے۔

کیا یہ اوورسیز پاکستانیوں کی خدمات کا یہ صلہ ہے۔ملک میں پہلی بار کینسر کے مریضوں کی مفت ادویات کی سہولت بھی ختم کر دی گئی ہے۔پیپلزپارٹی مطالبہ کرتی ہے اوورسیز پاکستانیوں کے بچوں کا تعلیمی اداروں میں داخلہ اور کینسر کے مریضوں کی مفت ادویات کی سہولتیں بحال کی جائیں۔انہوںنے کہاکہ آڈیٹر جنرل آف پاکستان کی رپورٹ میں 15 ہزار 670 ارب روپے کی بے ضابطگیوں سامنے آئی ہیں،عمران خان اس رپورٹ پر توجہ دیں۔

آپ نے تو پوری قوم کو تپتی جگہ پر بٹھا دیا ہے ،آپ نے ملک میں جو آگ لگا رکھی ہے، آپ کے اپنے پائوں جلنے والے ہیں،ان کے سلیکٹرز بھی کچھ خیال کریں۔ساری سیاسی جماعتیں انفرادی اور اجتماعی طور پر اس حکومت کیخلاف محاذ بنائیں گی۔انہوںنے کہاکہ تجارتی خسارہ کم کرنے کو یہ اپنی کامیابی کہتے ہیں ،لیکن نواز شریف کے دورے میں صنعتوں اور توانائی منصوبوں کے لئے مشینری آتی رہی تو امپورٹ بل زیادہ رہا،آپ نے باہر سے ملک کے لئے کچھ منگوایا ہی نہیں تو امپورٹ بل کم ہونا ہی تھا،آپ اپنے اہداف حاصل نہیں کر سکے،یہ ملکی اداروں کو بیچنا چاہتے ہیں،ادارے بیچ کر ہی ملک چلانا تھا تو یہ ملک کوئی طالب علم بھی چلا لیتا،ان کا آئندہ 4 سالوں میں 40 ارب ڈالر کا قرضہ لینے کا پروگرام ہے ۔
وزیراعظم کااقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں خطاب سے متعلق تازہ ترین معلومات