ٹیکسز سے بھر پور بجٹ سے غربت، بے روزگاری ،مہنگائی میں اضافہ ہوگا‘خادم حسین

بجٹ آئی ایم ایف کی مشاورت سے بنا،اربوں روپے کے ٹیکسز سے اشیائے خوردونوش سمیت ہر شے مہنگی ہوگی‘سینئر نائب صدر فیروز پور بور ڈلاہور

ٹیکسز سے بھر پور بجٹ سے غربت، بے روزگاری ،مہنگائی میں اضافہ ہوگا‘خادم ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 12 جون2019ء) پاکستان سٹون ڈویلپمنٹ کمپنی کے بور ڈ آف ڈائریکٹرز کے رکن خادم حسین نے کہا ہے کہ ٹیکسز سے بھر پور بجٹ سے غربت، بے روزگار اور مہنگائی میں اضافہ ہوگا عوام حکومت کے پہلے باقاعدہ بجٹ میں ریلیف کی امید کررہے تھے لیکن بجٹ میں کھربوں روپے کے ٹیکسز سے اشیائے خوردونوش سمیت ہر چیز مہنگی ہوگئی حکومتی پالیسیوں کے باعث براہ راست اور بیرونی سرمایہ کاری میں52فیصد کمی ہوئی ہے اور افراط زر میں تیزی سے اضافہ ہوا۔

روپے کی قدر میں کمی اور ڈالر انتہائی اونچی سطح پر پہنچنے سے عوام پہلے ہی مہنگائی سے متاثر ہورہے تھے رہی سہی کسر بجٹ میں کھربوں کے ٹیکسوں نے پوری کردی بجٹ سے مہنگائی کا سیلاب آئے گا جس سے صنعتی شعبہ سمیت ہر طبقہ متاثر ہوگا۔

(جاری ہے)

ان خیالات کااظہار انہوںنے فیروز پور بورڈ کے تاجروں کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔خادم حسین نے کہا کہ بجٹ آئی ایم ایف کی مشاورت سے بنا مزید منی بجٹ آئیں گے بجٹ میں اربوں کے ٹیکسز سے اشیائے خوردونوش سمیت ہر شے مہنگی ہوگئی ۔انہوںنے کہا کہ بجٹ سے معیشت کی شرح نمو میں مزید کمی ہوگی جس سے صنعتی شعبہ بھی متاثر ہوگا۔اشیائے خوردونوش سمیت مختلف اشیاء پر سیلز ٹیکس کی شرح17فیصد کرنے سے غریب کی زندگی مہنگائی کے ہاتھوں اجیرن ہوجائے گی۔

Your Thoughts and Comments