ورلڈ الیون شُکریہ اور آزادی کرکٹ کپ جیتا پاکستان نے

World Eleven Shukriya

ورلڈ الیون نے بین الاقوامی کرکٹ کو پاکستان میں بحال کروانے کیلئے قدم بڑھایا اور ٹی20سیریز ختم ہونے کے ساتھ ہی جناب نجم سیٹھی صاحب نے خوشخبری دی کہ ویسٹ انڈین بورڈ نے نومبر2017ء میں ویسٹ انڈیز کرکٹ ٹیم کو دورہِ پاکستان کرنے کی اجازت دے دی ہے۔و رلڈ الیون کے کھلاڑیوں کا شُکریہ۔آپ نے دہشت گردی کو شکست دی

Arif Jameel عارف‌جمیل ہفتہ 16 ستمبر 2017

ورلڈ الیون نے بین الاقوامی کرکٹ کو پاکستان میں بحال کروانے کیلئے قدم بڑھایا اور ٹی20سیریز ختم ہونے کے ساتھ ہی جناب نجم سیٹھی صاحب نے خوشخبری دی کہ ویسٹ انڈین بورڈ نے نومبر2017ء میں ویسٹ انڈیز کرکٹ ٹیم کو دورہِ پاکستان کرنے کی اجازت دے دی ہے۔و رلڈ الیون کے کھلاڑیوں کا شُکریہ۔آپ نے دہشت گردی کو شکست دی۔ ساتھ میں پاکستان کے سیکیورٹی اداروں کا بھی شُکریہ۔


12ِ تا 15ِ ستمبر2017ء کو تین میچوں کی ٹی 20کرکٹ سیریز پاکستان بمقابلہ ورلڈ الیون قذافی اسٹیڈیم لاہور میں کھیلی گئی جس میں بلے بازوں نے مجموعی 38 چھکے لگا کر تماشائیوں کے دِل جیت لیئے ۔پاکستان ٹیم نے 2 - 1 سے سیریز جیت کر پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ کو مستقبل میں بھی جاری رکھنے کیلئے دُنیا ِ ِکرکٹ کو ایک دفعہ پھر متوجہ کروا لیا ۔

(جاری ہے)

جو ایک خوش آئندہ بات ہے۔


سیریز میں پاکستان بیٹنگ ،باؤلنگ اور فیلڈنگ سب شعبوں میں بہتر نظر آیااور نوجوانوں نے بہترین باڈی لینگویج کا مظاہرہ کیا ۔کپتان سرفراز احمد کے مطابق ٹیم ورک بہت بہتر رہا لیکن ابھی بہت محنت کی ضرورت ہے۔ دوری طرف ورلڈ الیون کے کھلاڑیوں نے پاکستانیوں کا بہٹ شُکریہ ادا کیا کہ اُنکی طرف سے اعلیٰ ترین مہمان نوازی کی مثال قائم کی گئی ہے۔


تیسر ا ٹی 20 کرکٹ میچ فائنل بن گیا:
آزادی کرکٹ کپ سیریز کے پہلے دونوں میچ پاکستان اور ورلڈ الیون نے ایک ایک جیت لیئے ۔لہذا تیسرا میچ فائنل کی حیثیت اختیار کر نے کی وجہ سے شائقین کیلئے دِلچسپی کا باعث بن گیا۔15ِ ستمبر 2017ء کو کھیلے جانے والے تیسرے ٹی20 میچ میں ٹاس ورلڈ الیون نے جیت کر فیلڈنگ کرنے کو ترجیع دی۔
حسب ِمعمول وکٹ نے ورلڈ الیون کے باؤلرز کی کو ئی خاص مدد نہ کی اور پاکستانی بلے باز اسکور کرنے میں بھی کامیاب ہو گئے ۔

بہرحال آؤٹ بھی اپنی غلطی پر ہوئے۔ دونوں اوپنر ز احمد شہزاد 89اور فخر زماں 27رنز بنا کر بین کیٹنگ اور ڈیرن سیمی کے ہاتھوں رن آؤٹ ہو گئے۔بابر اعظم ایک دفعہ پھر اپنی نصف سنچری مکمل نہ کر سکے اور48رنز پر اونچا شارٹ کھلتے ہو ئے آؤٹ ہوئے۔عماد وسیم صفرپر پویلین واپس گئے اور شعیب ملک 17 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔اسطرح20اوورز کے مکمل ہونے پر 4کھلا ڑی آؤٹ پر 183اسکور بنائے۔

ورلڈ الیون کی طرف سے تھیسارا پریرا نے 2کھلاڑی آؤٹ کیئے۔
ورلڈ الیون کے اوپنر تمیم اقبال نے بیٹنگ پر آتے ہی جارحانہ انداز اپنانے کی کوشش کی لیکن14رنز پر ہی آؤٹ ہو گئے اور دوسرے اوپنرہاشم آملہ 21رنز بنا کر حسن علی کے ہاتھوں رن آؤٹ ہوئے۔جسکے بعد باقی کھلاڑی بھی جم کر نہ کھیل سکے اور آؤٹ ہو نے شروع ہو گئے۔ڈیویڈ ملر اور تھیسارا پریر نے32،32رنز بنائے اور ڈیرن سیمی 24رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

لہذا 20اوورز میں ورلڈالیون8 وکٹوں پر 150اسکور بنا سکے اور 33رنز سے شکست کھا گئے۔پاکستان کی طرف سے باؤلنگ میں نمایاں رہے حسن علی2وکٹیں حاصل کر کے۔ عماد وسیم، عثمان شنواری خان اور رومان رئیس نے ایک ایک کھلاڑی آؤٹ کیا۔
مین آف دِی میچ بنے " احمد شہزاد" ۔
اہم واقعات:
#پاکستان کی طرف سے سہیل خان کی جگہ حسن علی کو کھلایا گیا۔


#ورلڈ الیو ن کی طرف سے پال کالنگ ووڈ اور ٹم پین کو آرام کروا کرڈیرن سیمی اور جارج بیلی کو کھیلنے کا موقع فراہم کیا گیا۔
#احمد شہزاد کی خلاف توقع دُھواں دار بیٹنگ پر شائقین حیرانگی کا اظہار کرتے رہے ۔ گراؤنڈ کے چاروں طرف چوکے چھکے لگائے۔
#رومان رئیس نے شاندار باؤلنگ کرتے ہوئے سیریز کا پہلا اور واحد میڈن اوور کیا۔
#شاہد آفریدی اور مصباح الحق کی قذافی اسٹیڈیم میں آمد اور سجائے ہوئے رکشوں میں اسٹیڈیم کا چکر لگانے پر شائقین خوش ہوئے۔


# مین آف دِی سیریز " ہاشم آملہ اور بابر اعظم" ہوئے۔
# اس میچ میں قذافی اسٹیڈیم ہاؤس فُل رہا۔
# " اَرشمہ" نامی لڑکی نے گلے میں بڑا ڈھول ڈال کر پاکستان کی جیت کی خوشی میں بجایااور ڈھول کی تھاپ پر لڑکوں نے بھنگڑا بھی ڈالا۔
دوسرا ٹی20 کرکٹ میچ ورلڈ الیون نے جیتا:
13ِ ستمبر2017ء کو قذافی اسٹیدیم لاہورمیں ڈے اینڈ نائٹ کھیلے جانے والے ووسرے میچ میں ٹاس پاکستان کے کپتان سرفراز احمد نے جیتا لیکن وکٹ پر گیند آہستہ آنے اور کچھ نیچے رہنے کی وجہ سے پاکستانی بلے بازوں کو کچھ دُشواری کا سامنا کرنا پڑا۔

پھر بھی وہ 20اوورز میں 174رنز بنانے میں کامیاب ہو گئے اور اُنکے6کھلاڑی آؤٹ ہوئے۔ احمد شہزاد اور بابر اعظم نے 43اور 45رنز اور شعیب ملک 39رنز بنا کر نمایاں رہے۔ورلڈ الیون کی طر ف سے تھیسارا پریرا اور سمیوئیل بدری نے 2،2اور بین کٹنگ اور عمران طاہر نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔
ورلڈ الیون کیلئے ایک دفعہ پھر بڑا ٹارگٹ تھا لیکن اوپنر ہاشم آملہ کی ذمہدارانہ بیٹنگ اور تھیسارا پریرا کی 5چھکوں کے ساتھ جارحانہ بیٹنگ نے کھیل کا نتیجہ اُنکے حق میں کر دیا اور20ویں اوور کی 5ویں گیند پر ورلڈ الیون نے 3کھلاڑی آؤٹ پر 175رنز بنا کر7وکٹوں سے میچ جیت لیا۔

ہاشم آملہ 72اور تھیسارا پریرا47رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔ پاکستان کی طرف سے عماد وسیم، سہیل خان اور محمد نواز نے ایک ایک کھلاڑی آؤٹ کیا۔
مین آف دی میچ " تھیسارا پریرا" قرار پائے ۔
دوسرے میچ کے اہم واقعات:
#پاکستان کی ٹیم میں 2تبدیلیاں۔ محمد حسن اور فہیم اشرف کی جگہ محمد نواز اور عثمان شنواری خان کو شامل کیا گیا۔
#ورلڈ الیون کی ٹیم میں بھی 2کھلاڑی تبدیل ہو ئے۔ ڈیرن سیمی اور گرانٹ ایلیٹ کی جگہ سمیوئیل بدری اور پال کالنگ ووڈکھیلے۔
#پاکستان ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے ٹی 20کا پہلا گولڈن ڈ ک کیا ۔یعنی صفر پر آؤٹ ہو ئے۔
#میچ کے دوران تیز آندھی اور ہلکی بارش بھی ہوئی۔
#شائقین کو یہ شکایت رہی کہ ٹکٹیں بہت مہنگی تھیں۔

مزید مضامین :

Your Thoughts and Comments