بند کریں
شاعری علی یاسریہ دھرتی یہ امبر کوئی سایہ ہے

(242) ووٹ وصول ہوئے