بند کریں
شاعری نوشی گیلانینجانے کن غم کے جگنووں کو چھپائے پھرتی ہے مٹھیوں میں

(245) ووٹ وصول ہوئے