بند کریں
شاعری کامران رضوی

لمس لیتی ہوئی ہوا اس سے

-

lamas leeti hui hai uss se


(190) ووٹ وصول ہوئے