بند کریں
شاعری اذلان شاہ

بے یقینی کا تعلق بھی یقیں سے نکلا

-

beyaqeeni ka taluq bhi yaqeen se nikla


(77) ووٹ وصول ہوئے