بند کریں
شاعری فیصل ہاشمی

تو گزر گیا کسی موج میں جسے توڑ کر مرے کوزہ گر

-

tu guzar giya kissi mooj main jisse torr kar mere kozagar


(390) ووٹ وصول ہوئے