بند کریں
شاعری سعید شارقمَیں اپنے آپ کو یوں بھی سہار لیتا ہوں

(40) ووٹ وصول ہوئے