بند کریں
شاعری حامد رسول مسافر

عمر بھر دوسروں کے گھر میں رہے

-

umer bhar dosroon k liye


(217) ووٹ وصول ہوئے