بند کریں
شاعری عمران عامی

اس لیے مجھ میں انتشار نہیں

-

Is liay mujh me inteshar nahi


(2491) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان