بند کریں
شاعری اسلم انصاریشکستہ پا ہیں مگر پھر بھی چلتے جاتے ہیں

(312) ووٹ وصول ہوئے