بند کریں
شاعری حمایت علی شاعر

ہر قدم پر نت نئے سانچے میں ڈھل جاتے ہیں لوگ

-

har qadam per nit naye sanche main dhaal jate hain loog


(429) ووٹ وصول ہوئے