بند کریں
شاعری جان کاشمیری

ویرانیِ نظر پہ نہ کوئی سوال کر

-

weerani nazar pey na koi sawal kar


(257) ووٹ وصول ہوئے