بند کریں
شاعری جوش ملیح آبادی

ساری دنیا ہے ایک پردہ راز

-

saari duniya hai ek parda e raaz


(441) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان