بند کریں
شاعری کوثر جعفری

سینہ میں کوئی مقصد حاصل نہیں رہا

-

seena main koi maqsaad

کوثر جعفری

kauser jafri

(270) ووٹ وصول ہوئے