بند کریں
شاعری محبوب صابرکوئی بھی ہاتھ اُس کو دعائیں نہ دے سکا

(148) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان