بند کریں
شاعری ناصر کاظمی

دن پھر آئے ہیں باغ میں گل کے

-

Din phir aye hain


(214) ووٹ وصول ہوئے