بند کریں
شاعری رساچغتائی

خواب اس کے ہیں جو چرا لے جائے

-

khawab uss k hain ju chura le jaye


(105) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان