بند کریں
شاعری صائمہ کامران

جب کبھی دل میں تمنّاؤں کے دَر کھُلتے ہیں

-

jab kabhi dil mian tamanaoon k dar khulte hain


(173) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان