بند کریں
شاعری ثنا ء اللہ ظہیر

توڑ کر حلقہِٴ ایام نہیں آ سکتا

-

torr kar halqa e ayaam main nahi aa sakta


(314) ووٹ وصول ہوئے