بند کریں
شاعری ثروت حسین

ایک نظم کہیں سے بھی شروع ہو سکتی ہے

-

aik nazm kaheen se bhi shoro ho sakti hai


(7) ووٹ وصول ہوئے