بند کریں
شاعری شمیم حنفی

یہ رشتہٴ جاں میری تباہی کا سبب ہے

-

yeh rishta e jaan mere tabahi ka sabab hai


(409) ووٹ وصول ہوئے