بند کریں
شاعری ولی دکنی

مت کا سخن

-

Mut ja sukhan


(133) ووٹ وصول ہوئے