بند کریں

مہندی کے ڈیزائین

مضامین

اضمحلال وافسردگی میں کھانوں پر توجہ زیادہ
میرے پاس زیادہ تر ایسے مریض آتے ہیں جو مٹاپے کی شکایت کرتے ہیں۔ وہ یہ بھی کہتے ہیں کہ ان کا وزن زیادہ ہو گیا ہے ، کھانا ہضم نہیں ہوتا اور وہ ذہنی کھچاوٴ کا شکار رہتے ہیں۔ غیر شادی شدہ افراد ان خرابیوں پر زیادہ توجہ دیتے ہیں
میٹرو بس میں سفر کرنے والی خواتین کی تعدادبڑھنے لگی
اس بس کی بدولت لوگوں اور خصوصاً خواتین کو سفری سہولت میسر ہوئی ہے وہیں یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ خواتین کی بڑی تعداد اس بس میں روزانہ سفر کرتی ہے اور اس میں طالبات کی بڑی تعداد شامل ہے
گھریلو ناچاقیاں۔ جلدبڑھاپا
تحقیق میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ گھریلونا چاقیوں کا منفی اثر خواتین پر زیادہ پڑتا ہے کیوں کہ مرد حضرات اکثر روز مرہ کے گھریلو لڑائی جھگڑے جلد بھول جاتے ہیں لیکن خواتین ان کا دل پر زیادہ اثر لیتی ہیں اور ہر روز ایسی باتوں پر جلتی کُڑھتی رہتی ہیں
پسند کی شادی نا پسند کیوں؟
مشہور محاورہ ہے ”میاں بیوی راضی تو کیا کرے گا قاضی“۔ لیکن پسند کی شادی کو ہمارے معاشرے میں ہمیشہ ہی ناپسندیدگی کی نگاہ سے دیکھا جاتا ہے۔ اگر گھر والے چار نا چار لڑکی یا لڑکے کو پسند کی شادی کی اجازت دے دیتے ہیں
موسم سرما کی پریشانی ، کھانسی سے نجات پائیں
اگر کھانسی کا علاج اس کی نوعیت کے مطابق نہ کیا جائے تو یہ صورتحال کو سدھارنے کے بجائے مزید بگاڑ کا باعث بن سکتا ہے سینے کی جکڑن اور دائمی کھانسی سے چھٹکارا پانے کے لیے لہسن سب سے بہترین دواثابت ہو سکتا ہے شہد کے استعمال سے گلے کی خراش میں راحت ملتی ہے یہ بلغم بھی دور کرتا ہے
ملازمت پیشہ خواتین
چھوٹے بال کیوں پسند کرتی ہیں؟ ہم اس لئے بال کٹوانے کو ترجیح دیتی ہیں کہ چلتے چلتے گنگھی کریں تاکہ وقت پر آفس کیلئے نکل سکیں۔اگر ہم بال لمبے رکھیں تو کم ازکم پندرہ منٹ پوری تیاری کیلئے اور آدھا گھنٹہ بال سلجھانے کیلئے درکار ہوتا ہے
دل کے دورے کے ٹیسٹ سے خواتین کی جان بچ سکتی ہے
ایک تحقیق میں کہا گیا ہے کہ خون کے ایک نئے اور زیادہ حساس ٹیسٹ سے ڈاکٹر کسی خاتون میں دل کا دورہ پڑنے کے امکان کو دوگنا بہتر طور پر جان سکتے ہیں۔اس ٹیسٹ میں اس پروٹین کی خفیف سی موجودگی کا پتہ چل سکتا ہے
بی بی ام اطلق رحمتہ اللہ علیہا
بی بی اُمِ اطلق رحمتہ اللہ علیہا دوسری صدی ہجری کی نہایت عبادت گزار خاتون گزری ہیں۔
بی بی شعوانہ رحمتہ اللہ علیہا
دوسری صدی ہجری میں نہایت پاکباز اور خدا رسیدہ خاتون گزری ہیں۔ ایران کی رہنے والی تھیں۔
بی بی فاطمہ رحمتہ اللہ علیہا نیشاپوری
بی بی فاطمہ رحمتہ اللہ علیہا خراسان کے شہر نیشا پور کی رہنے والی تھیں۔ آپ کو معرفت الٰہی میں اعلیٰ مقام حاصل تھا
حضرت آمنہ رملیہ رحمتہ اللہ علیہا
حضرت آمنہ رملیہ رحمتہ اللہ علیہا 163 ہجری میں بغداد کے نواحی شہر رملہ میں پیدا ہوئیں۔آپ غریب والدین کی اولاد تھیں
حضرت رابعہ بصری رحمتہ اللہ علیہا
”اے میرے مالک اگر میں دوزخ کے ڈر سے تیری عبادت کرتی ہوں تو مجھے دوذخ میں پھینک دے۔
حضرت نفیسہ رحمتہ اللہ علیہا بنت حسن رحمتہ اللہ علیہ
حضرت نفیسہ رحمتہ اللہ علیہا بنت حسن رحمتہ اللہ علیہا دوسری صدی ہجری کی مشہور عالمہ و عارفہ تھیں۔
مزید مضامین