Suno Tum Waqt Jaise Ho

سنو تم وقت جیسے ہو

سنو تم وقت جیسے ہو

ہمیشہ ہی کسی جلدی میں رہتے ہو

تمہیں جتنا بچاتا ہوں

میں جتنا سینت کر مُٹھی میں رکھتا ہوں

تم اتنا خرچ ہوتے ہو

سنو تم بات جیسے ہو

ادھوری بات جیسے

جو میرے ہونٹوں پہ کب سے منتظر ہے

ایسے لمحے کی

جہاؔں میں کچھ نہ کہہ کربھی

تمہیں ہر بات کہہ دوں

اور تم سب کچھ سمجھ جاؤ

سنو تم شام جیسے ہو

جو دن کے سرد ہونے پر

ہمیشہ گھر کی نیچلی سیڑھیوں پر

میرا اِستقبال کرتی ہے

میری تنہائیوں کے کینوس میں رنگ بھرتی ہے

سنو تم خواب جیسے ہو

میں جب کروٹ بدلتا ہوں

یا پھر پلکیں جھپکتا ہوں

تم میرے ہاتھ سے اُنگلی چُھڑا کر

تم کہیں پہ چھپ سے جاتے ہو

میں آنکھیں بند کر کے پھر تمہیں آواز دیتا ہوں

مگر پھر تم کبھی واپس نہیں آتے

نہ جانے کس نگر رہتے ہو تم

کس نیند میں بہتے ہو تم

کچھ بھی نہیں کھلتا

فقط ٹوٹی ہوئی نیندیں ہمارے ہاتھ آتی ہیں

سنو تم پھول جیسے ہو

میں صدیوں سے

تمہارے خواب کی خوشبُومیں مہکا ہوں

تمہارے کیف کے موسم میں رہتا ہوں

تمہارے لمس کے دھارے میں بہتا ہوں

سنو تم عشق جیسے ہو

بہت سچے، بہت اُجلے

ہمیشہ اتنے گہرے کہ تمہاری کھوج میں نکلیں

تو اپنی سمت کا راستہ بھی کھو جائے

تمہیں کیسے کوئی سمجھے

تمہیں کیسے کوئی پائے

سنو تم دُھوپ جیسے ہو

تمہارے جسم سے کرنیں ٹپکتی ہیں

میں جب پلکوں سے یہ کرنیں اُٹھاتا ہوں

تو میری آنکھ میں دنیا چمکتی ہے

میں اِن چمکیلے لمحوں میں

تمہارے ساتھ سایہ بن کے چلتا ہوں

ہوا کی بانسری پہ

تتلیوں کا لمس

وصل کے منظر میں ڈھلتا ہوں

ارشد ملک

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(254) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Arshad Malik, Suno Tum Waqt Jaise Ho in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 37 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Arshad Malik.