مشہور شاعر مصطفی زیدی کی شاعری ۔ نظمیں اور غزلیں

سناٹا

مصطفی زیدی

قطعہ

مصطفی زیدی

ماہیت

مصطفی زیدی

جو دن گزر گئے ہیں ترے التفات میں

مصطفی زیدی

گریہ تو اکثر رہا پیہم رہا

مصطفی زیدی

آخری بار ملو

مصطفی زیدی

یہ ایک بات کہ اس بت کی ہمسری بھی نہیں

مصطفی زیدی

وہ مہرو ماہ و مشتری کا ہم عناں کہا گیا

مصطفی زیدی

تم ہنسو تو دن دن نکلے چپ رہو تو راتیں ہیں

مصطفی زیدی

آپ نے جس کو فقط جنس سے تعبیر کیا

مصطفی زیدی

اس کی بے باکیوں میں غصہ تھا

مصطفی زیدی

آج پھر تم نے مرے دل میں جگایا ہے وہ خواب

مصطفی زیدی

سن اے حکیم ملت و پیغمبر نجات

مصطفی زیدی

وہ تو کیا سب کیلیئے فیصلہ دشوار نہیں

مصطفی زیدی

ایک دل اور اتنے بار گراں

مصطفی زیدی

ہر صدا ڈوب چکی قافلے والوں کے قدم

مصطفی زیدی

لوگ کہتے ہیں عشق کا رونا

مصطفی زیدی

ترے حضور مرے ماہ و سال کی دیوی

مصطفی زیدی

چمک سکے جو مری زیست کے اندھیرے میں

مصطفی زیدی

وقت سے کس کا کلیجہ ہے کہ ٹکرا جائے

مصطفی زیدی

ہم کو کون سا غم ہے آج کل خدا جانے

مصطفی زیدی

اے سوگوار یاد بھی ہے تجھ کو یا نہیں

مصطفی زیدی

ہر طرف چاک گریباں کے تماشائی ہیں

مصطفی زیدی

ناقدو دیدہ ورو کفر کاالزام نہ دو

مصطفی زیدی

Records 1 To 24 (Total 55 Records)