بند کریں
شاعری عبدالحمید عدمدیوان عدم

ہم دیوانے صبح سویرے جام اچھالا کرتے ہیں

-

Ham dewaaney subah swarey jaam uchala kertey hain


(355) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان