بند کریں
شاعری علی عمار کاظمی

کوئی آتا نہیں میری خبر کو

-

Koi aata nahi meri khabar ko


(0) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان