بند کریں
شاعری امجد جاوید

دیکھ شور دریا میں کتنی آہ و زاری ہے

-

dekh shoore darya main kitni ahozari hai


(237) ووٹ وصول ہوئے