بند کریں
شاعری کاظم حسین کاظمی

وہ تیری باتیں کسی راہ پرخطر کی طرح

-

wo tere batain kissi rahe khataar ki tarhaaN


(224) ووٹ وصول ہوئے