Bardasht Kiyon Kare Ga Zara Si Bhi Deer Dil

‎برداشت کیوں کرے گا زرا سی بھی دیر دل

‎برداشت کیوں کرے گا زرا سی بھی دیر دل

پھیری نظر تو روئے گا منہ پھیر پھیر دل

محسوس یہ ہوا ہے تری آنکھ کے طفیل

آئینہ ہے،چراغ ہے،مٹی کا ڈھیر دل

‎شاید تری طرف سے ہو آغازِ دل بٙری

‎کم بخت اِس لیے بھی تو کرتا ہے دیر دل

ذکرِ وفا جو آئے تو ہر بات پر ترا

کرتا ہے میرے دل سے بہت ہیر پھیر دل

‎ہم سے ملیں تو دل کو سنبھالا کریں جناب

‎ہم لوگ بات چیت سے کرتے ہیں زیر دل

‎دل داریوں کے دام میں بالکل نہ آئے گی

‎ہے سامنے جناب کے سچ مچ میں شیر دل

راشدہ ماہین ملک

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(474) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Rashida Maheen Malik, Bardasht Kiyon Kare Ga Zara Si Bhi Deer Dil in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 21 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Rashida Maheen Malik.