بند کریں
شاعری اسلم انصاری

وہ نخل جو بارور ہوئے ہیں

-

wo nakhal


(312) ووٹ وصول ہوئے