بند کریں
شاعری عطاالحق قاسمی

جو بھی کہنا ہے کہو پھر اَن کہا رہ جا ئے گا

-

ju bhi kehna hai kahoo phir an kaha reh jaye ga


(252) ووٹ وصول ہوئے