بند کریں
شاعری اطہرنفیس

پھر کوئی نیا زخم نیا درد عطا ہو

-

phir koi naya zakhm naya dard ata hoo


(276) ووٹ وصول ہوئے