بند کریں
شاعری فراق گورکھپوریتاریکی کا رہے زمانہ میں نہ داغ

(334) ووٹ وصول ہوئے