بند کریں
شاعری جون ایلیا

وہ زلف ہے پریشاں ہم سب ادھر چلے ہیں

-

Who zulf hai pareshan


(432) ووٹ وصول ہوئے